فری بلوچستان موومنٹ کی طرف سے 28 مئی کو پاکستان کے ایٹمی دھماکوں اور چین اور پنجابی کی بلوچستان میں آبادکاری کے خلاف مغربی ممالک میں احتجاج کیا جائے گا

MUST READ

بر دانش آموزان بلـوچ چه می گـذرد؟ – بخش چهـارم

بر دانش آموزان بلـوچ چه می گـذرد؟ – بخش چهـارم

تربت . شاپک کے ایریا میں پاکستانی فوج کا بربریت . کئی بے گناہ بلوچ گرفتار . لوٹ مار کے بعد گهروں کو آگ لگا دیا

تربت . شاپک کے ایریا میں پاکستانی فوج کا بربریت . کئی بے گناہ بلوچ گرفتار . لوٹ مار کے بعد گهروں کو آگ لگا دیا

بلوچستانءَ پاکستانی آئیوکین گچین کاریانی بابتءَ گپ ءُ ترانے گون روچتاک انتخابءِ سرمستر واجہ انور ساجديءَ

بلوچستانءَ پاکستانی آئیوکین گچین کاریانی بابتءَ گپ ءُ ترانے گون روچتاک انتخابءِ سرمستر واجہ انور ساجديءَ

بلوچستان میں ریفرینڈم نہیں چاہتے: حیر بیار مری

بلوچستان میں ریفرینڈم نہیں چاہتے: حیر بیار مری

شهيد ناصر ڈگارزھي

شهيد ناصر ڈگارزھي

سوءِ استفاده اشغالگران از فاجعه زلزله در کوردستان

سوءِ استفاده اشغالگران از فاجعه زلزله در کوردستان

پاکستان وایران کا بلوچ قومی جہد کے خلاف ہمیشہ سے ایک قریبی تعاون رہا ہے:حیربیارمری

پاکستان وایران کا بلوچ قومی جہد کے خلاف ہمیشہ سے ایک قریبی تعاون رہا ہے:حیربیارمری

مارچ1948 ؁ کا قضیہ . کردگار بلوچ

مارچ1948 ؁ کا قضیہ . کردگار بلوچ

وقت کا بھی یہی تقاضا ہے کہ ہم قابضین کی مسلط کردہ نظام کو مضبوط بنانے کے بجائے قومی سوچ کو وسعت دیں

وقت کا بھی یہی تقاضا ہے کہ ہم قابضین کی مسلط کردہ نظام کو مضبوط بنانے کے بجائے قومی سوچ کو وسعت دیں

ماتی زبان – گوس بھاربلوچ

ماتی زبان – گوس بھاربلوچ

گپ و ترانے چا گیبنءَ گون شهید حیات بیوسءِ گهارءَ

گپ و ترانے چا گیبنءَ گون شهید حیات بیوسءِ گهارءَ

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون بانک کارینا جهانیءَ

بیست ءُ یک فروری ماتی زبانانی میان اُستمانی روچءِ بابتءَ گپ وترانے گون بانک کارینا جهانیءَ

جئے سندھ متحدہ محاذ کے کارکن شهید سرویچ پیرزادہ کے والد لطف علی سے گفتگو

جئے سندھ متحدہ محاذ کے کارکن شهید سرویچ پیرزادہ کے والد لطف علی سے گفتگو

نوک نوکترین حال آوارانءِ زمین چنڈءِ رپورٹ

نوک نوکترین حال آوارانءِ زمین چنڈءِ رپورٹ

 ایرانءِ بلـوچ دژمنیں “استراتجی” ماں رودراتکی بلوچستانءَ

 ایرانءِ بلـوچ دژمنیں “استراتجی” ماں رودراتکی بلوچستانءَ

فری بلوچستان موومنٹ کی طرف سے 28 مئی کو پاکستان کے ایٹمی دھماکوں اور چین اور پنجابی کی بلوچستان میں آبادکاری کے خلاف مغربی ممالک میں احتجاج کیا جائے گا

2020-03-26 11:58:31
Share on

فری بلوچستان موومنٹ نے اپنے اعلان نامہ میں کہا ہے کہ پاکستان نے 28مئی 1998 میں اپنا ہلاکت خیز ،پرتباہ کن اور گندی بم کا دھماکہ سرزمین بلوچستان کے علاقے چاغی میں کرتے ہوئے بلوچ علاقے کو ہمشہ کے لیے اَلودہ کردیا اور دھماکہ کی وجہ سے علاقے کے لوگ مختلف بیماریوں کا شکار ہوئے ہیں ،1998 سے بین القوامی ماہر علاقے میں دھماکوں کی تابکاری کا جائزہ لینے پر قابض پاکستان سے اجازت مانگ رہے ہیں لیکن پنجابی ریاستِ پاکستان انکو اجازت نہیں دہے رہا ہے ۔پاکستان کے ایٹم بم سے جہاں بلوچ سرزمین متاثر ہوا ہے اور اس انسان کش بم سے بلوچ ،سندھی اور پشتونوں کو خطرہ لاحق ہے وہاں پاکستان نے پیسوں کی خاطر جوہری پھیلاوُکرکے اس نے جوہری راز باقی ممالک کو بھی دئے جس میں شمالی کوریا اور ایران سرفہرست ہیں ایران کو جوہری ٹیکنالوجی دینے کا اعتراف پاکستان کے ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر قدیر نے ٹی وی پر خود کیا تھا۔ یہی دہشت گرد ممالک جو آج پوری دنیا کے لیے سردرد بنے ہوئے ہیں ان کا چوہدری پاکستان ہے جو کہ دہشت گردی کا جڑ ہے دنیا ایران اور شمالی کوریا کے پیچھے تو لگا ہوا ہے لیکن دہشت گردوں کی سربراہ ابلیس پاکستان کو کھلا چھوڑا ہوا ہے جس کے جوہری پروگرام کا پاکستانی فوج کے بنائے ہوئے مذہبی شدت پسندوں کے ہاتھ لگنے کا خدشات زیادہ ہے کیونکہ پاکستان مذہبی جنونیت کو پروان چڑھانے والی ایک غیر ذمدارملک کے ساتھ ساتھ پیسوں کی خاطر سب کچھ کرنے والا ملک ہے ،پاکستان اور شمالی کوریا جیسے غیرذمدار ممالک کے ہاتھ میں ایٹم بم پوری انسانیت کو نقصان دینے کے مترادف ہے ۔ دوسری جانب پاکستان نے چین کو اپنا شریکار بنایا ہوا ہے اور چین اور پاکستان کی بلوچستان میں کروڑوں کی تعداد میں فوج اور چینی اورپنجابیوں کی آبادکاری کا منصوبہ ہے جو کہ بلوچستان کی ڈیموگرافی کو تبدیل کرنے اور بلوچ قوم کو اپنی سرزمین میں اقلیت میں تبدیل کرنے کا گھناؤنا سازش ہے اس لیے فری بلوچستان مومنٹ 28 مئی کو لندن،جرمنی،سویڈن،ناروئے،کینڈا،اور امریکہ سمیت باقی ممالک میں پاکستانی ایٹمی دھماکوں اور چین اور پاکستان کی مقبوضہ بلوچستان میں چینی اور پنجابی آبادکاری کے خلاف احتجاج کرے گی اور فری بلوچستان مومنٹ تمام آزادی پسند اقوام ،انسانی حقوق کے کارکنان
اور نیوکلیئر ہتھیار مخالف گروپ سے التماس کرتا ہے کہ وہ 28مئی کے احتجاج میں شرکت کریں

Share on
Previous article

گروہی سوچ اور منتشر بلوچ قوت – اداریہ

NEXT article

شاعر ءُ ارواه – نمیرانیں واجہ عبدالصمد امیری

LEAVE A REPLY